اب کیا ہوگا


گذشتہ رات ای میل چیک کررہا تھا کہ اچانک ایک پرانی  ای میل نظروں کے سامنے آگئی ، جوکہ ہماری ایک انڈونیشین بہن انڈاہ نے اسامہ بن لادن کی وفات کے بعد خیریت معلوم کرنے کے غرض سے لکھی تھی ،  وہ بہت گھبرائی ہوئی تھی کہ پاکستان کے حالات کیسے ہیں ؟ آپ لوگ خیریت سے ہیں ، خبروں میں بتا رہے ہیں کہ اسامہ پاکستان سے پکڑا گیا ہے اور امریکا نے خودساختہ آپریشن کےذریعہ اسے ہلاک کردیا ۔۔۔۔۔

آپکی پریشانی بجا ہے اور ہونی بھی چایئے ، اور یہ ہی فکر ہر پاکستانی کے دل میں بھی لگی رہتی ہے کہ آخر کیا کھیل کھیلا جارہا ہے ، پاکستان دہشت گردی کے خلاف جنگ کررہا ہے یا دہشت گردوں کو حفاظت فراہم کرہا رہا ہے ، معاملہ کیا ہے ؟ کوئی تو ہو جو اس راز پر سے پردہ ہٹائے ، اس کٹھ پتلی کے کھیل میں  پاک امریکا کے کردار کو بے پہرن کرے ،   اگر پاک امریکا کے تعلقات کو دوستی کہیے تو پھر اس شرمناک دوستی کو کیا کہیے ،  جو ایک طرف آپ کے نام کی مالا جپتا پھرے  تو دوسری طرف  مخالفین کو اسلحہ فراہم کرتا رہے ، اس وار اگینسٹ ٹیرر میں تو پاکستان امریکا کا ساتھی ہے پھر یہ نت نئے ہتھیار انڈیا کی نذرکیوں  ہو رہے ہیں ، اس جنگ میں 30000 فوجی جوان  جوپاکستان نے کھوئے  وہ کس فہرست میں گنے جائیں گے ، کیا وہ اپنے وطن ِعزیز کی حفاظت کرتے ہوئے شہید ہوئے یا دوستی کی بلی چڑھ گئے ،

اگر امریکا کا دعویٰ ہے کہ پاکستان نے اسامہ کو گزشتہ پانچ سالوں سے پنا ہ دے رکھی تھی تو پھر اس عرصہ میں امریکا افغانستان میں کسے تلاش کررہا تھا ، کس پہ بم باری ہورہی تھی ،  کس کا خون بھایا جا رہا تھا ،  کتنے اسامہ افغانستان میں چھپے ہوئے تھے کہ سب کو مارنے کے بعد آخری اسامہ ایبٹ آباد سے مارا گیا ؟

اور اگر امریکا کا یہ دعویٰ درست ہے کہ پاکستان نے اسامہ کو پناہ دے رکھی تھی تو سادہ لفظوںمیں اسکا مطلب یہ ہوا کہ پاکستان خود ایک دہشگرد ملک ہے  اور امریکا ایک دہشگرد ملک سے دوستی کی دعویٰ کررہا ہے ، پھر تو خود امریکا کے خلاف آپریشن ہونا چائیے ، اگر پاکستان میں اتنے دہشت گرد ہیں کہ پچھلے دس برس سے ان کا صفایہ نہیں ہو پارہا ، تو پھر یہ سب نائن الیون سے پہلے کہا ں تھے ؟

یہ تو نہایت ئی قلیل فہرست تھی اس سے کئی گنا طویل فہرست بنائی جا سکتی ہے ، اور اس کے لئے بڑی موٹی کتابیں چھاننے کی قطعی ضرورت نہیں  بس اہل ِ مسلم کی بے بسی اور لاچاری سے ملئیے اس سے پوچھیئے، پھر دیکھیے کہ کتنے سوال نمودار ہوجاتے ہیں اور ان کا جواب آپکے پاس فی الوقت کوئی نہیں ۔

اور اس نوعیت کے سولات میں سب سے اہم اور پوچھا جانے والا سوال  (اب کیا ہوگا)

میں اپنے تمام دوستوں اور بھائیوں سے گذارش کرتاہوں کہ دل شکستہ نہ ہوں ، ہونا کیا ہے ؟ جو بھی ہوگا سب کے سامنے ہوگا ،  یہ دہشت گردی کے نام پر اسلام کے خلاف جنگ ہے ،  اگر کفار کا ساتھی شیطان ہے تو ہمارا رکھ والا بھی اللہ ہے ، اور پھر شیطان کیا مجال جو خدا کے سامنے کھڑا بھی ہوسکے ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s