یھودی کس نبی کا انتظار کر رہے تھے؟


چھ لاکھ اسرائیلیوں کو فرعون کی غلامی سے نکالنے والے خدا کے نبی حضرت موسیٰ ؑ نے اسرائیلیوں کو خدا کا پیغام سناتے ہوئے کہا

میں انکے بھائیوں کے درمیان سے  تیری طرح ایک نبی برپاکروں گا  ۔ اور اپنا کلام اسکے منہ میں ڈالوں گا جو کچھ میں اسے حکم دوں گا وہ انسے کہے گا ، اور جو انسان میرے کلام کو جو وہ میرے نام سے کہے گا نہ مانے گا تو میں اسکا حساب اس سے لوں گا ﴿تثنیہ شرع18:18-19 ﴾

مسیحی دنیا میں آج تک یہ ہی سمجھا جا رہا ہے  کہ  حضرت موسیٰؑ نے یہ بشارت حضرت یسوع مسیح ؑکے حق میں کہی تھی ۔ لیکن ایسا ہرگز نہیں مسیحی کتب مقدسہ کا مطالعہ کرنے سے معلوم پڑتاہے کہ بنی اسرائیل یسوع مسیح ؑکے زمانے میں بھی ایک نبی کا انتظار کررہے تھے ۔

اور یوحنا کی شہادت یہ ہے کہ جب یھودیوں نے کاہن اور لاوی اسکے پاس یہ پوچھنے کو بھیجے کہ تو کون ہے ؟ تو اس نے اقرار کیا اور انکار نہ کیا ، بلکہ اقرار کیا کہ میں تو المسیح نہیں ہوں ۔ تب انہوں نے اس سے پوچھا پھر کیا تو الیاس ہے ؟ اسنے کہا کہ میں الیاس نہیں ہوں ، کیا تو النبی ہے ؟ اس نے جواب دیا کہ نہیں ۔ ﴿یوحنا 1:19-22﴾

جوابات

تین سوالات     اور انکے

نہیں

١۔ کیا تم المسیحؑ ہو؟

نہیں

۲ کیا تم الیاسؑ ہو؟

نہیں

۳ کیا تم النبی ہو؟

اس واقعہ سے ظاہر ہوتا ہے کہ یھودی منتظر تھے ، المسیح ، الیاس ، اور النبی کے ۔  یہاں ایک تبدیلی کا ذکر کرنا بہت ضروری ہے اس لئے ہمیں تھوڑا موضوع سے ہٹ نا  پڑے گا ۔

در حقیقت النبی کا انگریزی ترجمہ    The Prophet ہوگا ، لیکن کنگ جیمز ورژن میں النبی کی جگہ The Prophet بجائے That Prophetکا لفظ استعمال ہوا ہے ۔ انگریزی جاننے والے بھائی اور بھنیں خوب جانتے ہیں کہ The Prophet اورThat Prophetمیں کتنا فرق ہے ۔ اس تبدیلی کی اصل وجہ تو میں نہیں بتا سکتا ، لیکن اس سے سچائی کو سمجھنے میں ایک رکاوٹ ضرور کہہ سکتے ہیں ۔

آئیے موضوع کی طرف

یہودی منتظر تھے

١۔ المسیح ؑ

الیاسؑ

النبی ؑکے

المسیح کون ہے

اس سوال کا جواب اس قدر آسان ہے کہ اس پر کچھ لکھنا یقینن فضول ہوگا ، آپ کسی بھی مسیحی بھائی یا بھن سے پوچھ سکتے ہیں کہ المسیحؑ کون ہے Christ  آپ کو فورا جواب ملے گا یسوعJesus

المسیح

الیاس

النبی

ü

?

?

الیاس کون ہے

الیاس کے بارے میں یسوع مسیح  کا کہنا ہے کہ وہ تو آچکا  جس کا ذکر بائبل میں ان لفظوں سے موجود ہے

مگر میں تم سے سچ کہتا ہوں کہ الیاس تو آچکا  لیکن انہوں نے اسے نہیں پہچانا بلکہ جو چاہا  اسکے ساتھ کیا ﴿متی12:17﴾

مطلب  کہ الیاس  آیا بھی اور چلا بھی گیا لیکن یھودیوں نے انہیں نہیں پہچانا اور اس ناعلمی کی وجہ سے وہ اب تک ان کا انتظارکررہے تھے

المسیح

الیاس

النبی

ü

ü

?

تین پیشینگوئیوں میں سے دو تو مکمل ہوچکی تھیں لیکن  اب ایک باقی تھی اور وہ تھی تیسری پیشنگوئی النبی کی آمد، تو آئیے سمجھنے کی کوشش کریں کہ النبی کون ہے ؟

ایک بار پھر مذکورہ پیشنگوئیوں پر ایک نظر ڈالتے چلیں ۔ چونکہ یھودی تین شخصیات کی آمد کے منتظر تھے ان میں سے ایک المسیحؑ جو کہ حضرت عیسیٰ ؑتھے ، جسے آج کے مسیحی یسوع مسیح کہتے ہیں

اور دوسرے تھے الیاسؑ  جس کے متعلق یسوع  مسیح کا کہنا تھا کہ وہ تو آئے اور چلے بھی گئے مگر ان یہودیوں نے انہیں پہچانا نہیں ۔

اور تیسری پیشنگوئی جوکہ اس وقت تک نامکمل تھی وہ تھی النبی کی آمد۔

النبی کون ہے؟

آپ ایسی بائبل تلاش کیجئے جس میں آیا ت پر حوالے دیئے گئے ہوں اس سے آپکو تیسری پیشنگوئی کو سمجھنے میں آسانی ہوگی ،  یعنی کہ آنے والے نبی کو پہچاننے میں مدد ملے گی جوکہ یسوع مسیحؑ کے زمانے تک ابھی  نہیں آیا تھا ۔

جب آپ بائبل میں مقدس یوحنا  کے باب نمبر ١ اور آیت نمبر 21 کا حوالہ دیکھیں گے تو وہاں النبی کو جاننے کے لئے  جس آیت کا حوالہ دیا گیا ہے وہ ہے تثنیہ شرع18:18

میں انکے بھائیوں کے درمیان سے  تیری طرح ایک نبی برپاکروں گا  ۔ اور اپنا کلام اسکے منہ میں ڈالوں گا جو کچھ میں اسے حکم دوں گا وہ انسے کہے گا ، اور جو انسان میرے کلام کو جو وہ میرے نام سے کہے گا نہ مانے گا تو میں اسکا حساب اس سے لوں گا ﴿تثنیہ شرع 18:18-19﴾

انکے بھائیوں کے درمیان سے

ابرہام ﴿حضرت ابراہیم ؑ﴾

اسحاقؑ

بھائی

اسماعیلؑ

اسحاق کی اولاد

اسماعیل کی اولاد

اسرائیل ﴿حضرت یعقوبؑ﴾

آپس میں بھائی ہوئے

؟

حضرت موسیٰؑ

حضرت عیسیٰؑ ﴿یسوع مسیح﴾

حضرت ابراہیم ؑکی دو بیویاں تھیں حضرت سارہ اور حضرت ہاجرہ ۔  حضرت سارہ سے اسحاق ؑسے حضرت ہاجرہ سے اسماعیلؑ پیدا ہوئے

جیسا کہ حضرت اسحاقؑ اور حضرت اسماعیلؑ دونوں بھائی تھے لحاظا انکی اولاد بھی آپس میں بھائی ہوئے ﴿اسرائیلی اور اسماعیلی﴾۔ چونکہ اس پیشنگوئی کے مطابق وہ یھودی اور اسرائیلی نہیں بلکہ انکے بھائیوں ﴿اسماعیلیوں ﴾ سے ہوگا۔ انکے بھائیوں کے درمیان سے مطلب کہ اسماعیلیوں ﴿عرب ﴾ میں سے

تیرے جیسا ﴿تیری طرح کا﴾

سب سے پہلے ہمیں حضرت موسیٰ ؑکے متعلق اہم باتوں کی خبر ہونی چاہیئے تاکہ ہم تجزیہ کرسکیں

١۔ خدا تعالیٰ نے انہیں  ۴۰ سال کی عمر میں نبوت سے سرفرازکیا

۲۔ آپ اپنی قوم میں ایک بادشاہ کی حیثیت رکھتے تھے

۳۔ آپ نے اپنی امت کے ہمراہ ہجرت کی

۴۔ آپ کی قوم نے آپ کو خدا کا نبی تسلیم کیا

۵۔ آپ نے جنگیں لڑیں

٦۔ آپ نے شادی کی اور اولاد ہوئی

۷۔ آپ کی پیدائش فطری عمل سے ہوئی ﴿کسی معجزہ کے بغیر﴾

۸۔ آپ کا انتقال فطری طور سے ہوا ﴿آپ نا تو قتل ہوئے اور ناہی مصلوب﴾

۹۔آپ کو شریعت دی گئی

تلاش پوری ہوئی

یہاں ایک ہی ایسی مقدس شخصیت ہیں جوکہ حضرت موسیٰؑ اور حضرت عیسیٰؑ ﴿یسوع مسیح﴾ کے بعد دنیا میں آئے اور اس پیشنگوئی پر مکمل طور پر پورے اترتے ہیں ۔

انکے  بھائیوں ﴿عرب﴾ کے درمیان سے

حضرت محمد ﷺ عرب میں سے تھے  آپ حضرت ابراہیم کے بیٹے حضرت اسماعیل کی اولاد میں سے ہیں ۔

تیرے طرح کا  ﴿تیرے جیسا﴾

١۔  حضرت محمد ﷺکو ۴۰ سال کی عمر میں نبوت ملی ۔ حضرت موسیٰ ٰ ؑکی طرح

۲۔ حضرت محمد ﷺ اپنی قوم میں ایک بادشاہ کی حیثیت رکھتے تھے ۔ حضرت موسیٰٰ ؑ کی طرح

۳۔ حضرت محمد ﷺنے اپنی امت کے ہمراہ ہجرت کی ۔ حضرت موسیٰٰ ؑ کی طرح

۴۔حضرت محمد ﷺکی قوم نے آپ ﷺ کو خدا کا نبی تسلیم کیا ۔ حضرت موسیٰٰ ؑ کی طرح

۵۔حضرت محمد ﷺ نے جنگیں لڑیں ۔ حضرت موسیٰٰ ؑ کی طرح

٦۔حضرت محمد ﷺنے شادی کی اور اولاد ہوئی۔ حضرت موسیٰٰ ؑ کی طرح

۷۔ حضرت محمد ﷺ کی پیدائش فطری عمل سے ہوئی ﴿کسی معجزہ کے بغیر﴾ ۔ حضرت موسیٰٰ ؑ کی طرح

۸۔ حضرت محمد ﷺ کا انتقال فطری طور سے ہوا ﴿آپ ﷺ نا تو قتل ہوئے اور ناہی مصلوب﴾ ۔ حضرت موسیٰ ٰ ؑکی طرح

۹۔حضرت محمد ﷺ کو شریعت دی گئی ۔ حضرت موسیٰٰ ؑ کی طرح

ایک نبی برپا کروں گا

حضرت محمد ﷺ بھی خدا کے نبی تھے جس کا ثبوت بائبل میں موجود ہے مزید جاننے کے لئے وزٹ کیجیےwww.mirfatehalishah.com

اپنا کلام اسکے منہ میں ڈالوں گا

قرآن مجید وحی کے ذریعہ حضرت محمد ﷺ پر نازل ہوا ، اور آپ کی زبان مبارک سے لوگوں تک پہنچا ۔ اگر آپکو خدشہ ہو کہ قرآن اللہ کی کتاب نہیں تو اس سلسلے میں آپ سے اتنی گذارش کرسکتا ہوں کہ آپ قرآن کا مطالعہ کیجئے اور خود ہی فیصلہ کیجئے ۔

اگر آپ اس تحقیق سے مطمئن ہیں تو آپ کو معلوم ہوچکا ہوگا کہ تیسری پیشنگوئی ﴿النبی کی  آمد ﴾ حضرت محمد ﷺکے بارے میں ہے ۔

المسیحؑ

الیاسؑ

النبی

یسوع مسیح ﴿حضرت عیسیٰؑ﴾

یسوع مسیح ؑنے کہا کہ وہ تو آئے اور چلے بھی گئے

تثنیہ شرع

ê

حضرت محمد ﷺ

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s